لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے






Jo Ghair Thay Woh Ussi Baat Par Hamaray Huway...





جو غیر تھے وہ اسی بات پر ہمارے ہوئے
کہ ہم سے دوست بہت بے خبر ہمارے ہوئے

کسے خبر وہ محبت تھی یا رقابت تھی
بہت سے لوگ تجھے دیکھ کر ہمارے ہوئے

اب اک ہجوم شکستہ دلاں ہے ساتھ اپنے
جنہیں کوئی نہ ملا ہم سفر ہمارے ہوئے

کسی نے غم تو کسی نے مزاج غم بخشا
سب اپنی اپنی جگہ چارہ گر ہمارے ہوئے

بجھا کے طاق کی شمعیں نہ دیکھ تاروں کو
اسی جنوں میں تو برباد گھر ہمارے ہوئے

وہ اعتماد کہاں سے فرازؔ لائیں گے
کسی کو چھوڑ کے وہ اب اگر ہمارے ہوئے

احمد فراز
Relevent Best Poetry
Gham Ki Barish Ne Bhi Tere N...

Kitnay Sooraj Aaye Gaye, Koh...

Ishq Mein Zillat Hoi Khift H...

Yeh Charagh Be-Nazeer Hai Ye...

Khuli Jo Aankh to Woh Tha, N...

Piyar Karne Walon Ka Bus Yah...



Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com